مسجد ملاکا؛ ملایشا میں تیرتی پرکشش مقام

Rate this item
(0 votes)
مسجد ملاکا؛ ملایشا میں تیرتی پرکشش مقام

ایکنا نیوز، اسلام میں مسجد ایک عبادت گاہ اور اجتماعی مقام کے عنوان سے انتہائی اہمیت کی حامل جگہ شمار ہوتی ہے جہاں اہل فن کوشش کرتے ہیں کہ اس مکان میں اپنے آرٹ کی نمائش پیش کرسکے لہذا قسم قسم کی تزئین  و آرائش کا جلوہ یہاں نظر آتا ہے۔

جنوب مشرقی ممالک میں مساجد میں اسلامی فن معماری اور ہندی طرز معماری کی امتزاج نمایاں ہیں اور انڈونیشیاء اور ملایشیاء میں کافی مساجد اس کی گواہ ہیں۔

ملایشیاء کے شہر ملاکا کی مسجد تنگه ملاکا (Malacca Straits Mosque) مذہبی طرز تعمیر کی شاہکار مسجد سمجھی جاتی ہے جو عبادت کے علاوہ تفریحی حوالے سے سیاحوں کے لیے پرکشش جگہ بھی ہے۔

یہ مسجد مصنوعی جزیرہ ملاکا میں واقع ہے جو 24 نومبر 2006 کو ملایشیاء کے بادشاہ «یانگ دی‌پرتوان آگونگ» کے ہاتھوں افتتاح کیا گیا. اس مسجد پر ۱۰ میلین رینگیٹ (۲,۲۴۶ ملین ڈالر) لاگت آئی تھی، یہ مسجد تیرتی مسجد ہے۔

اس مسجد کو گھریلو دست کاریوں سے تزئین کی گیی ہے جو میڈل ایسٹ اور مالائی ثقافت کی امتزاج کی نمونہ ہے اور جب پانی زیادہ ہوتا ہے تو مسجد تیرتی نظر آتی ہے۔

اس مسجد میں دو کمرے ہیں جہاں رنگ برنگے شیشوں سے تعمیر شدہ ہے اور مسجد کے صحن میں ایک مینار ہے جو تیس میٹر بلند ہے جس کو سمندری فانوس کا درجہ حاصل ہے۔/

 

 

4072930

 
 
Read 149 times

Add comment


Security code
Refresh