امام خمینی (رح) نے شہنشاہیت کا تختہ الٹ کر اس کی جگہ عوامی جمہوریت کو بحال کیا

Rate this item
(0 votes)
امام خمینی (رح) نے شہنشاہیت کا تختہ الٹ کر اس کی جگہ عوامی جمہوریت کو بحال کیا
رہبر انقلابِ اسلامی نے امام خمینی رحمۃ اللّٰہ علیہ کی 34ویں برسی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے فرمایا کہ امام خمینی (رح) کی قیادت میں وجود میں آنے والے انقلاب جو کہ اسلامی اور عوامی انقلاب ہے، فلسطین کے مسئلے کو عالمی مسئلہ بنا دیا۔

رہبر انقلابِ اسلامی حضرت آیت اللہالعظمیٰ سید علی خامنہ ای نے امام خمینی رحمۃ اللّٰہ علیہ کی 34ویں برسی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے فرمایا کہ امام خمینی (رح) کی قیادت میں وجود میں آنے والے انقلاب جو کہ اسلامی اور عوامی انقلاب ہے، فلسطین کے مسئلے کو عالمی مسئلہ بنا دیا۔

امام خمینی رحمۃ اللّٰہ علیہ کی 34ویں برسی کی تقریب، عوام، قومی و عسکری حکام اور غیر ملکی سفیروں کی موجودگی میں مرقد امام خمینی رحمۃ اللّٰہ علیہ تہران میں جاری ہے۔رہبرِ انقلابِ اسلامی نے امام خمینی رحمۃ اللّٰہ علیہ کو زبردست الفاظ میں خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے فرمایا کہ ملک کی نئی نسلوں کو امام رحمۃ اللّٰہ علیہ کے بارے میں مزید جاننے کی ضرورت ہے۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی نے فرمایا کہ امام بزرگوار ابن سینا اور شیخ طوسی سے زیادہ متنوع شخصیت کے حامل ہیں۔ امام خمینی رحمۃ اللّٰہ علیہ کا روشن چہرہ اپنی دلکش اور دلفریب آواز سے سب کے سامنے اپنا تعارف کرواتا ہے۔ امام نے شہنشاہیت کا تختہ الٹ کر اس کی جگہ عوامی جمہوریت کو بحال کر دیا۔

انہوں نے مزید فرمایا کہ انقلابِ اسلامی نے ظلم و استبداد کو آزادی میں بدل دیا۔ انقلابِ اسلامی نے "ہم کر سکتے ہیں" کے جذبے کو پروان چڑھایا۔ امام رحمۃ اللّٰہ علیہ کے انقلابی اقدام سے مسئلہ فلسطین عالم اسلام کا اولین مسئلہ بن گیا۔ امام رحمۃ اللّٰہ علیہ کو تاریخ کے اوراق سے حذف نہیں کیا جا سکتا۔

امام خمینی رحمۃ اللّٰہ علیہ تاریخی رہبروں میں سے ایک ہیں

رہبر انقلابِ اسلامی نے حضرت امام خمینی (رح) کو تاریخی رہبروں میں سے ایک قرار دیا اور تاکید فرمائی کہ تاریخی اشخاص کو تاریخ سے حذف نہیں جا سکتا اور نہ ہی ان کو مسخ کیا جا سکتا ہے۔

امام رحمۃ اللّٰہ علیہ کی مدد کرنے والے عوامل آپ کے ایمان اور امید تھے۔

انہوں نے مزید فرمایا کہ شہید مطہری رحمۃ اللّٰہ علیہ پیرس میں امام (رح) سے ملاقات کے بعد، آپ کے ایمان پر حیرت کا اظہار کیا کرتے تھے۔

رہبرِ انقلابِ اسلامی نے دشمنوں کی لوگوں کے ایمان اور امید کو تباہ کرنے کی کوششوں کے بارے میں کہا کہ مغربی سیکورٹی اداروں کی طرف سے مختلف فسادات میں مالی، ہتھیار اور میڈیا کی مدد فراہم کی جاتی رہی۔ فسادات میں دشمنوں کی منصوبہ بندی ایسی تھی کہ لوگ سمجھنے لگے تھے کہ اسلامی جمہوریہ کا کام ختم ہو گیا ہے، لیکن ان احمقوں نے اپنی غلطی دہرائی تھی۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی نے فرمایا کہ اسلامی جمہوریہ کے پرعزم جوانوں نے علمی میدانوں میں بڑے اور مؤثر کام کئے۔

آپ دیکھیں! ایرانی نوجوان کس عظمت کا مظاہرہ کرتے ہیں۔ ہماری مساجد میں ہزاروں جوانوں کی تربیت ہوتی ہے۔

رہبر انقلابِ اسلامی نے آنے والے انتخابات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے فرمایا کہ یہ انتخابات بہت اہم ہیں۔ دشمن آج سے ہی ہمارے آنے والے انتخابات پر نظر رکھے ہوئے ہے۔
https://taghribnews.
Read 256 times