روزہ کی اہمیت پر حضرت علی علیہ السلام کے فرامین

Rate this item
(0 votes)

روزه اخلاص کا امتحان

قال اميرالمؤمنين علیه السلام: فرض الله الصيام ابتلاء لاخلاص الخلق

امام على علیہ السلام نے فرمایا: خدا نے روزه واجب کیا تاکہ اس کے ذریعے اپنی مخلوقات کے اخلاص کا امتحان لے.

(نہج البلاغہ، حكمت 252 )

 

نفس کا روزه

قال اميرالمؤمنين علیه السلام :صوم النفس عن لذات الدنيا انفع الصيام.

اميرالمؤمنین على علیہ السلام نے فرمایا: نفس کا دنیاوی لذتوں سے روزه (واجتناب)، مفید ترین روزوں میں سے ہے.

(غرر الحكم، ج 1 ص 416 ح 64 )

 

حقیقی روزه

قال اميرالمؤمنين علیه السلام:الصيام اجتناب المحارم كما يمتنع الرجل من الطعام و الشراب.

امام على علیہ السلام نے فرمایا: روزه حرام سے پرهیز کا نام ہے جس طرح کہ انسان کهانے اور پینے سے پرهیز کرتا ہے.

(بحار ج 93 ص 249 )

 

برترين روزه

قال اميرالمؤمنين علیه السلام :صوم القلب خير من صيام اللسان و صوم اللسان خير من صيام البطن.

امام على علیہ السلام نے فرمایا: قلب کا روزه زبان کے روزے سے بہتر ہے اور زبان کا روزه پیٹ کے روزے سے بہتر ہے. (غرر الحكم، ج 1، ص 417، ح 80 )

 

قال اميرالمؤمنين علیه السلام

كم من صائم ليس له من صيامه الا الجوع و الظمأ و كم من قائم ليس له من قيامه الا السهر و العناء.

امام على علیہ السلام نے فرمایا: کتنے زیاده ہیں وه روزه دار جن کو روزے سے بهوک اور پیاس کے سوا کچھ نہیں ملتا اور کتنے زیاده ہیں وه تہجد گذار اور شب زنده دار لوگ جن کو بیخوابی اور صعوبت کے سوا کوئی فائده نصیب نہیں ہوتا.

(نہج البلاغہ، حكمت 145 )

Read 1880 times

Add comment


Security code
Refresh