حضرت آیة اللہ العظمیٰ حسین المظاہری مد ظلہ الشریف

Rate this item
(0 votes)

استفتائات اورسوالات کے جوابات

سوال کرنے والے مشخصات : نام اور فیملی نام :حجة الاسلام و المسلمین سید علی قاضی عسگر ''دام عزہ''

مو ضوع :اعتقادات سوال نمبر :٢٠٠٢١

جواب کی تاریخ: 26/12/1391 ه‍ .ش

جواب کا متن :

جو کچھ تحریرکیا گیاوہ تلخ حقیقت ہے جس پرپوری دنیا کے مسلمان خاص طورپراسلامی مذا ہب کے علماء نیزاسلامی ممالک کے رؤسا کوتوجہ اوراس کاعلاج کرنے کی چا رہ جوئی کرناچا ہئے،اب اسلامی دشمن اورعالمی استکبارمسلمانوں کی صفوں میں خاص طورسے مذہبی اورعقیدتی اختلاف ایجاد کرتے ہوئے آئے دن اپنے تسلط وقبضہ کووسیع اورمحکم ومضبوط کرتاجارہا ہے قرآن کریم ان اختلافات کواسلامی معاشرہ پرغالب آگ اورعذاب کے مثل جانتا ہے :'' قُلْ ہُوَالْقَادِرُ عَلَی انْ یَبْعَثَ عَلَیْکُمْ عَذَابًامِنْ فَوْقِکُمْ اوْمِنْ تَحْتِ ارْجُلِکُمْ اوْیَلْبِسَکُمْ شِیَعًاوَیُذِیقَ بَعْضَکُمْ بَاس ''سورئہ انعام آیت ٦٥۔ جیسا کہ قرآن کریم صاف طورسے فرماتا ہے کہ استکباراورانسا نیت ومعنویت کے دشمن انسانوں پرمسلط ہوچکے ہیں اوریہ اسی اختلاف ایجاد کرنے کااثر ہے :'' اِنَّ فِرْعَوْنَ عَلَا فِی الاَرْضِ وَجَعَلَ اَھْلَھَاشِیَعَا''اس بڑے درد اورعظیم بلاومصیبت کاعلاج قرآنی دستور ''تَعَالَوْ ا اِلیٰ کَلِمَةٍ سَوَائٍ بَیْنَنَا وَبَیْنَکُمْ''پر عمل کئے بغیرممکن نہیں ہوگا ۔

اس بنا پرجیساکہ ہم متعدد مرتبہ یاد دہانی کراچکے ہیں کہ اختلاف ایجاد کرناچا ہے وہ فرداورگروہ کے ذریعہ ہونیزمذہبی احساسات کی تحریک کے ذریعہ ہو،خاص طورسے مسلمانوں کے مقدسات اوراعتقادات کی توہین ہواورپیغمبرعظیم الشان (ص)کا اتباع کرنے والوں کی صفوں کے درمیان تفرقہ ایجاد کرناعقلی اورشرعی طورپرجا ئزنہیں ہے،اسی طرح تکفیرومتحجّرگروہوں کے ذریعہ تباہ وبرباد کرنے والے اورخودکش حملوں کے اقدامات کرناجوبے گناہ مسلمانوں کے کشت وکشتارقتل وغارت کا باعث ہوتے ہیں یہ برے اورغیرانسانی عمل ہیں جوہرآزاد انسان کے دل کورنج وغم پہونچا تے ہیں اوریہ بات مسلّم ہے کہ اسلام اور مسلمانوں کے دشمن اس طرح کے تمام اقدامات ہی چا ہتے ہیں اورعالمی استکباراس چیزکی تلاش میں ہے کہ اس طرح کے اختلافات برپاکرنے اورتفرقہ انگیزاقدامات سے عملی طورپرمسلمان اُن کے ساتھ ہوجائیں اورظاہرہے کہ دشمن اورعالمی استکبار کا اتباع کرنا ایک بہت بڑا گناہ ہے۔خداوند عالم تمام مسلمانوں کو اختلاف اورتفرقہ ڈالنے کے شرسے محفوظ رکھے اورتمام افراد جومسلمانوں کے درمیان اتحاد کومحکم ومضبوط کرناچا ہتے منجملہ جناب عالی،خدا انھیں یہ توفیق عنایت فرما ئے ۔

والسلام علیکم و رحمة اللہ و برکاتہ

حسین المظاہری

٤جمادی الاولیٰ ١٤٣٤ھ ق ١٢/٢٦ / ١٣٩١ ھ ش

Read 1409 times

Add comment


Security code
Refresh