حضرت آیة اللہ العظمیٰ علوی گرگانی مد ظلہ الشریف

Rate this item
(0 votes)

دفتر حضرت آیة اللہ العظمیٰ علوی گرگانی مد ظلہ العالی

بسمہ تعالیٰ

خدا وند عالم کا فرمان ہے :''یَا اَیُّھَا الَّذِیْنَ آمَنُوْ ا اد خُلُوا فِي السّلْمِ کَافَّة وَ لَاتَتَّبِعُوا خُطُوَا تِ الشَّیْطَان اِنَّہُ لَکُمْ عَدُوّ مُبِیْن''سورئہ بقرہ (٢)آیت ١٦٨۔

تمام ادوارمیں اسلام کا پیغام ہرطرح کی جسارت،تہمت اوربہتان سے پرہیزمنطق اورگفتگو پراعتماد کئے ہوئے تھا۔جہاں پراللہ فرماتا ہے :''اِدْفَعْ بِالَّتِ ھِیَ اَحْسَن'' اور یہ بھی فرماتا ہے :''وَلاَتَسُبُّوا الَّذِینَ یَدْعُونَ مِنْ دُونِ اﷲِ فَیَسُبُّوا اﷲَ عَدْوًا بِغَیْرِ عِلْمٍ'' اور موجودہ حالات میں اصل اسلام اور کلمہ ''اللہ ''کے دشمنوں نے تمام آسما نی ندا کے خاتمہ اوردنیامیں شیطانی حا کمیت کے لئے سازش رچی ہے،ان میں اختلافات اوردشمنی کی فضا ایجاد کرنے کی راہ میں نہیں چلناچاہئے کیونکہ اس کانفع صرف عالمی استکباراوربین الاقوامی صہیونزم کوہے جس طرح گذشتہ زمانہ میں مختلف اسلامی فرقے مخصوص افکاررکھنے کے باوجود ایک دوسرے کے ساتھ احترام اورمسالمت آمیز زندگی کرتے تھے اورصرف جلسوں میں بحث و گفتگو اورمنطقی مناظرے کیا کرتے تھے،آج بھی صلح کے ساتھ ایک ساتھ رہیں اور سب دشمنوں کے مقابلے میں متحد ہوں لیکن ہم اُن انکار کرنے والے گروہوں کے عمل کو محکوم کرتے ہیں جو طرح طرح کے بہانوں سے دوسرے فرقوں خاص طورسے شیعہ فرقہ کے ساتھ دشمنی کرنے کی کوشش کرتے ہیں،نیزدنیا کے مختلف مقامات جیسے پا کستان ،افغانستان،عراق ،سوریہ ،انڈو نیشیا اور دوسرے بعض مقامات پرمسلمانوں کاکشت وکشتاراورانھیں قتل کر دیتے ہیں ،اُن کے اس کام سے صرف عالمی استکباروالے خوش ہوتے ہیں اوروہ اُن ہی کے راستہ پرگامزن ہیں اورقرآن کریم کے اس فرمان ''لَا تَتَّخِذُوا الکافرین اولیائ''کی صاف طورپرخلاف ورزی کرتے ہوئے اس عمل میں صہیونزم کو اپنا دوست بنا لیتے ہیں اوراُن ہی کی ہم آہنگی سے شیعوں کے خلاف تلاش و کو شش کیاکرتے ہیں اورہم دعا کرتے ہیں کہ خدا وندعالم مسلمانوں کے معاشرے کو تفرقہ اوردشمنی سے دوررکھے ۔

محمد علی علوی

Read 1451 times

Add comment


Security code
Refresh