شام سے امریکہ کی دشمنی جاری، پابندیاں رہیں گی جاری

Rate this item
(0 votes)
شام سے امریکہ کی دشمنی جاری، پابندیاں رہیں گی جاری

وائٹ ہاؤس نے اطلاع دی ہے کہ امریکی صدر جو بائیڈن نے شامی حکومت کے خلاف یکطرفہ پابندیوں کی مدت میں مزید ایک سال کی توسیع کا فیصلہ کیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق یہ فیصلہ واشنگٹن کی طرف سے 2004 سے 2012 تک دمشق کے خلاف عائد کی گئی متعدد پابندیوں کے قوانین پر مبنی ہے۔

 ان پابندیوں میں خاص طور پر بعض افراد اور قانونی اداروں کے اثاثے منجمد کرنا اور شام کے لیے امریکی خصوصی اشیا اور خدمات کی برآمدات پر پابندی شامل ہے۔

اس بارے میں امریکی صدر جو بائیڈن نے کہا ہے کہ میں شامی حکومت کے اقدامات کی وجہ سے شام کے حوالے سے ملک کی قومی صورتحال میں مزید ایک سال کی توسیع کر رہا ہوں۔

شام کی عرب لیگ میں واپسی سے متعلق ایک سوال کے جواب میں وائٹ ہاؤس کی ترجمان کرین جین پیئر نے کہا کہ شام کے خلاف امریکی پابندیاں جاری رہیں گی اور واشنگٹن دمشق کے ساتھ اپنے تعلقات کو معمول پر نہیں لائے گا۔

انہوں نے کہا کہ ہم اس سلسلے میں اپنے دوستوں اور شراکت داروں سے ان کی سرگرمیوں اور منصوبوں کے بارے میں بات چیت کر رہے ہیں اور ہم واضح طور پر کہتے ہیں کہ ہم بشار الاسد کی صدارت میں دمشق کے ساتھ اپنے تعلقات کو معمول پر نہیں لائیں گے۔

Read 206 times